انوشہ رحمن ہوش کے ناخن لیں، یو ٹیوب پر پابندی برقرار رکھی جائے: خواتین رہنما

لاہور(لیڈی رپورٹر) یوٹیوب پرتوہین آمیز مواد کی موجودگی کے باوجود وفاقی وزیر انوشہ رحمن کی جانب سے یوٹیوب کھولنے کے اعلان پر خواتین نے کہا ہے کہ انوشہ رحمن ہوش کے ناخن لیں ، توہین آمیز مواد کی موجودگی کے باوجود یوٹیوب کو کھولنے کا اعلان مسلمانوں کے زخموں پر نمک چھڑکنے کے مترادف ہے۔ ہمارا ایمان عشق رسول کے بغیر مکمل نہیں ہوسکتا۔ نوائے وقت سے گفتگو میں زاہدہ اشرف اور فائزہ اخترنے کہا کہ حکومت مواد کی موجودگی کے باوجود یوٹیوب کھولنے کی بجائے ا یسی فلمیں اور موادکے ریلیز اور شائع کرنے کے حوالے سے مزید سخت قوانین بنانے کیلئے کوشش کرے تا کہ اظہار رائے کے نام پر ایسے مذموم اقدامات کا دروازہ ہمیشہ کےلئے بند ہو سکے۔ پروین منظور اور یاسمین الیاس نے کہا کہ یوٹیوب پر توہین آمیزمواد مسلمانوں کیلئے سخت دل آزاری کا سبب ہے ، حکومت مواد کو بلاک کیے بغیر یوٹیوب کوکھولنے کا تصور بھی نہ کرے ۔