پاکستان کو وزیرستان آپریشن کے حوالے سے مزید مشکل فیصلے کرنا ہونگے: ہلیری

واشنگٹن (این این آئی) امریکی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میںپاکستان کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے کہاہے کہ پاکستان کو وزیرستان آپریشن کے حوالے سے مزید مشکل فیصلے کرنا ہوں گے، دہشت گردی کے خلاف پاکستان کے عزم سے متاثر ہوں، امید ہے جنوبی وزیرستان میں شروع کیا جانے والا آپریشن بھی سوات آپریشن کی طرح کامیاب رہیگا۔ ایک انٹرویو میں ہلیری کلنٹن نے کہاکہ پاکستان کی سیاسی اور عسکری قیادت نے دہشت گردی کیخلاف جو عزم و ہمت دکھایا ہے وہ متاثر کن ہے اور پاکستان کے حکام ملک کو درپیش براہ راست خطرے کو بھانپ گئے ہیں اور وہ اس سے نمٹ رہے ہیں۔ انہوں نے کہاایک مضبوط اور مستحکم پاکستان نہ صرف خطے بلکہ پوری دنیا کیلئے مفید ہے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ بہت جلد خطے کو طالبانائزیشن اور القاعدہ سے پاک کر لیا جائیگا۔ ایک سوال کے جواب میں سابق امریکی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ پاکستان ان مقامات پر زیادہ فوکس کر رہا ہے جہاں طالبان اور القاعدہ کے مضبوط ٹھکانے ہیں اور وہ حملوں کی منصوبہ بندی کرتے ہیں لہذا میرے خیال میں پاکستان سمجھتا ہے کہ دہشت گرد اس کیلئے براہ راست خطرہ ہیں اور پاکستان اس مسئلے سے نمٹ رہا ہے جو کہ اچھا اقدام ہے۔
ہلیری کلنٹن