پنکچر لگا کر حکومت حاصل کی گئی، دھاندلی نہ ہوتی تو اقتدار میں ہوتے: عمران

پشاور (این این آئی) پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے عام انتخابات میں وسیع پیمانے پر دھاندلی نہ ہوتی تو آج وفاق اور چاروں صوبوں میں پاکستان تحریک انصاف اقتدار میں ہوتی۔ پشاور میں انصاف سٹوڈنٹس کنونشن سے ویڈیو لنک کے ذریعے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا ملک میں الیکشن شفاف نہیں ہوئے جس کی قیمت تحریک انصاف کو چکانا پڑی اور وہ اقتدار سے محروم ہو گئی۔ عمران خان نے کہا نوجوان ملک کا مستقبل ہیں، ان کو اپنا قبلہ درست کرنا ہو گا۔ ان کا کہنا تھا قائداعظمؒ اور نیلسن منڈیلا حق بات پر ڈٹے رہے اسی لئے بڑے لیڈر بنے۔ انہوں  نے کہا انتخابات میں پنکچر لگا کر حکومت حاصل کی گئی، آنیوالا دور تحریک انصاف کا ہے ،نوجوان پاکستان اور تحریک انصاف کا مستقبل ہیں۔ انہوں نے کہا طلباء پاکستان اور تحریک انصاف کا مستقبل ہیں۔ جب تک انسان اپنی زندگی کی صحیح سمت متعین نہ کرلے وہ بڑا انسان نہیں بن سکتا۔ بڑا انسان زیادہ پیسے والا نہیں بلکہ وہ ہوتا ہے جو اپنی ’’میں‘‘ اور خوف سے باہر آ جائے۔ انھوں نے کہا بت پرستی کا صرف یہ مطلب نہیں مورتی کی پوجا کی جائے بلکہ بت پرستی ہروہ چیز ہے جو انسانوں کو حق اور سچ کی راہ پر چلنے سے روکے۔ انہوں نے کہا عام انتخابات میں کھلے عام دھاندلی ہوئی، عدلیہ اور میڈیا آزاد تھے لیکن الیکشن کمیشن آزاد اور خود مختار نہیں تھا۔ آئندہ دھاندلی نہیں ہونے دینگے، اگلا دور تحریک انصاف کا ہی ہو گا۔ ہال طلباء سے کھچا کھچ بھرا رہا اور تل دھرنے کو جگہ نہ تھی۔