شام : خودکش حملہ‘ بمباری بچوں سمیت 170 ہلاک‘ جنگ بند‘ مذاکرات کئے جائیں : احمد ی نژاد


دمشق: واشنگٹن (نیوز ایجنسیاں) شام کے شورش زدہ شہر حلب سمیت کئی علاقوں میں بمباری اور جھڑپوں میں بچوں سمیت 170افراد مارے اور بیسیوں زخمی ہو گئے۔ مراة النعمان میں بمباری سے بچوں سمیت 70افراد جاں بحق ہو گئے۔ عیدالاضحیٰ پر جنگ بندی کی کوششیں جاری ہیں۔ اوباما کے نائب مشیر قومی سلامتی ڈینس میک نے عراقی حکام سے ملاقاتوں میں شام کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔ امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان وکٹوریہ نولینڈ نے کہا شام میں نوفلائی زون کے قیام پر غور جاری ہے۔ ادھر شامی وزیر داخلہ کے قریب موٹر سائیکل سوار نے خودکش حملہ کیا۔ نقصان کی اطلاع نہیں۔ انسانی حقوق کی تنظیموں کا کہنا ہے فوج اور مسلح باغیوں کے ہاتھوں اغوا ہونے والے 28ہزار افراد لاپتہ ہیں۔ ایرانی صدر احمدی نژاد نے کویت کے دورے پر شام میں جنگ بندی کا مطالبہ اور بحران کے حل کے لئے فریقین پر مذاکرات کیلئے زور دیا لیکن صدر بشارالاسد کو ہٹانے کی ترکی کی تجویز مسترد کر دی۔ سکالرز سے خطاب کرتے کہا دشمنوں کو ایٹم بم نہیں اپنے افکار اور ثقافت سے شکست دینگے: امریکہ جوہری پروگرام کو ایران پر دباﺅ ڈالنے کے لئے بہانے کے طور پر استعمال کر رہا ہے۔ خلیج فارس کی صورتحال غیرملکی افواج کی موجودگی سے خراب ہے۔ شام میں باغیوں نے عراق کی سرحد کے قریب تیل اور گیس کی دو پائپ لائنوں کو دھماکے سے اڑا دیا۔ روس نے کہا ہے ممنوع عسکری سامان شام کو فراہم نہیں کر رہا ہے۔ لخدار براہیمی کل شام کا دورہ کریں گے۔