القاعدہ رہنما العولقی تک پہنچنے کیلئے اڑھائی لاکھ ڈالر خرچ کئے گئے :برطانوی اخبار


لندن(آن لائن)ڈنمارک کے ایک سابق بائیکر اور نو مسلم مورٹن اسٹارم نے دعویٰ کیا ہے کہ انھیں امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے نے یمن میں القاعدہ کے لیڈر انور العولقی تک پہنچنے کے لیے ڈھائی لاکھ ڈالرز کی رقم ادا کی گئی تھی اور منصوبے کے تحت اس رقم میں سے ان کے لیے ایک یورپی دلھن کا بھی بندوبست کیا گیا تھا۔برطانوی اخبار ڈیلی ٹیلی گراف میں شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق مورٹن اسٹارم نے انور العولقی کے لیے میچ میکر کا کردار ادا کیا تھا اور ان کے لیے کروشیا کے شہر زغرب سے تعلق رکھنے والی نو مسلم آمنہ کا دلہن کے طور پر انتخاب کیا تھا۔مورٹن اسٹارم نے ڈینش اخبار ڑولاند پوستن کو ٹیکسٹ پیغامات، ڈالر بلوں اور سفری رسیدوں سے بھرے ایک سوٹ کیس کی تصویر فراہم کی ۔یمنی نژاد امریکی شہری انور العولقی کو القاعدہ کا سرکردہ پروپیگنڈا مشیر سمجھا جاتا تھا۔