سپین: اخراجات میں کمی اور ٹیکس میں اضافے کیخلاف ہزاروں افراد کا مظاہرہ


 میڈرڈ (آن لائن) سپین میں مختلف تنظیموں کے رہنماوں اور بڑی تعداد میں مزدوروں نے آئیکانک سکوائر پر ڈیرے ڈال دیئے ہیں۔ سپین کی تاریخ میں ملک گیر احتجاج شدت اختیار کر رہے ہیں۔اخراجات میں کمی اور ٹیکس میں اضافے کے خلاف احتجاج میں اب مختلف تنظیموں کے رہنما اور مزدوروں کی بڑی تعداد شامل ہوگئی ہے جنہوں نے ملک گیر احتجاج کا اعلان کیا ہے۔ مختلف تنظیموں کے رہنماو¿ں نے میڈیا سے گفتگو میں بتایا کہ اخراجات میں کمی کو برداشت کرلیا جائے گا لیکن ٹیکس میں اضافے کو کسی صورت نافذ نہیں ہونے دیں گے۔ رپورٹ کے مطابق سپین میں ہر کارکنوں میں سے ایک کارکن بے روزگار ہے۔ سپین کے وزیراعظم ماریانو راجوئے نے دباو¿ میں آنے کے بعد ہسپانوی بینکوں اور یورپی یونین سے مالی امداد حاصل کی ہے اور بجٹ میں ایک بیل آو¿ٹ پیکج پر غور شروع کردیا ہے۔ پرتگال، یونان اور یورپی دارالحکومت برسلز اور دیگر یورپی ممالک میں بھی مالی بحران پر احتجاج ہو رہا ہے۔