اسلامی وزرائے خارجہ کا اجلاس آج جبوتی میں شروع کشمیر پر خصوصی سیشن ہو گا


 اسلام آباد(ثناءنیوز)اسلامی ممالک کی تنظیم آرگنائزیشن آف اسلامک کانفرنس کے تحت اسلامی ممالک کے وزرائے خارجہ کا39 واںاجلاس5 1 نومبر کو جبوتی مےں شروع ہوگا ۔ اجلاس مےں رابطہ گروپ برائے کشمےر مےں مسئلہ کشمےر پر خصوصی سےشن ہوگا۔ یہ اجلاس مسلم دنیا کوکشمیریوں اور فلسطینی عوام کی حق خودا رادیت کی جدوجہدکے ساتھ اظہار یکجہتی کی توثیق کرنے کاموقع فراہم کرے گا۔ا سلامی کانفرنس کی تنظےم کے سےکرٹری جنرل کی دعوت پر کل جماعتی حرےت کانفرنس (گ) کے رہنما غلام محمد صفی او آئی سی کے کشمیر سے متعلق رابطہ گروپ کے اجلاس میںشرکت کرینگے۔پاکستان کی وزیرخارجہ اپنے دورے کے دوران او آئی سی کے کشمیر سے متعلق رابطہ گروپ کے ذمہ داروںسے ملاقات کے علاوہ رابطہ گروپ کے خصوصی اجلاس سے خطاب بھی کریںگی۔حنا ربانی کھر کے وفد کے ہمراہ پاکستان روانگی سے قبل اسلام آباد میںدفترخارجہ کی طرف سے ایک بیان جاری کیا گیا جس میںکہا گیاکہ وزرائے خارجہ کانفرنس کے دوران اس سے قبل منعقد ہوئی میٹنگوں اور بالخصوص مکہ مکرمہ میں حال ہی میں منعقد ہوئے چوتھے سربراہی اجلاس میں لئے گئے فیصلوں کا جائزہ لیا جائے گا۔بیان میں پاکستانی دفترخارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ 15سے17نومبر تک جاری رہنے والا یہ اجلاس اسلام آباد اور مسلم ممالک کو کشمیری اور فلسطینی عوام اور ان کی حق خودارادیت کی جدوجہد کے ساتھ یکجہتی کی توثیق کرنے کا موقعہ فراہم کرے گا۔پاکستانی دفترخارجہ کے ترجمان کے مطابق اپنے دورے کے دوران حنا ربانی کھر او آئی سی کے کشمیر سے متعلق رابطہ گروپ کے اجلاس سے خطاب کریں گی جبکہ وہ رابطہ گروپ کے ذمہ داروں کے ساتھ میٹنگ بھی کریں گی جس کے دوران دوطرفہ معاملات کے ساتھ ساتھ مسلم ممالک سے جڑے مسائل پر غوروخوض کیا جائے گا۔ دوسری جانب کل جماعتی حرےت کانفرنس (ع) کے چیئرمےن میرواعظ عمر فاروق ا سلامی کانفرنس کی تنظےم کی 39ویں وزرائے خارجہ کانفرنس مےں شرکت نہےں کرےں گئے ۔ او آئی سی کی طرف سے میرواعظ عمر فاروق کو اجلاس میںشرکت کی خصوصی دعوت دی گئی ۔تاہم میرواعظ نے چند مصروفیات کی وجہ سے اجلاس میں شرکت کرنے سے معذوری ظاہر کی ہے ۔
 وزرائے خارجہ اجلاس