پرویز اشرف صوابدیدی فنڈز کیس‘ حکومت نے سپریم کورٹ کے فیصلے کیخلاف نظرثانی اپیل دائر کر دی

اسلام آباد (نوائے وقت نیوز) پرویز اشرف صوابدیدی فنڈز کیس میں وزیر اعظم کو اضافی اور ضمنی گرانٹ کے معاملے پر صوابدیدی اختیارات استعمال کرنے سے روکنے کے فیصلے کیخلاف وفاقی حکومت نے سپریم کورٹ میں نظرثانی اپیل دائر کر دی ہے۔ سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف کی جانب سے اپنی مدت عہدہ کے آخری دس دنوں میں اربوں روپے کے ترقیاتی فنڈز جاری کرنے کے معاملے پر سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری نے از خود نوٹس لیا تھا اور 5دسمبر 2013ء کو فیصلہ سنایا تھا۔ سیکرٹری خزانہ کی جانب سے دائر نظرثانی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ وزیر اعظم کو اضافی فنڈز کے اجراء کی اجازت دی جائے۔ درخواست میں کہا گیا کہ مالیاتی مینجمنٹ کا جونظام قیام پاکستان کے بعد سے کام کر رہا ہے اس کی بنیاد پر حکومت کو امور سر انجام دینے کی اجازت دی جائے۔ درخواست میں کہا گیا کہ یہ مفید نظام آئین کے عین مطابق ہے۔ ایڈیشنل اٹارنی جنرل شاہ خاور نے یہ پٹیشن تیار کی تھی جو رواں ہفتے دائر کی گئی ۔ معلوم ہوا ہے کہ نظرثانی درخواست کی جلد سماعت کیلئے حکومت کی جانب سے آج متفرق درخواست دائر کئے جانے کا بھی امکان ہے۔