’ انتظامی اصلاحات کے نام پر دینی مدارس کو شکنجے میں کسنے کیخلاف ملک گیر تحریک چلائی جائیگی‘‘

رحیم یارخان(ثنا ء نیوز) ملک میں انتظامی اصلاحات کیلئے حکومت کی جانب سے مجوزہ تحفظ پاکستان آرڈیننس پر گہرے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے جمعیت علماء اسلام (ف) کی قیادت نے حکومت سے دو ٹوک مطالبہ کیا ہے کہ مجوزہ آرڈیننس منظوری ِکیلئے پارلیمنٹ میں لانے سے قبل وفاق المدارس پاکستان سمیت مذہبی وسیاسی جماعتوں کے ساتھ مشاورت کرکے ان کے تحفظات دور کئے جائیں۔ بصورت دیگر انتظامی اصلاحات کے نام پر مدارس دینیہ کو نئے شکنجہ میں کسنے کیخلاف ملک گیر تحریک چلائی جائیگی۔کسی دینے مدرسے کا دہشت گرد عناصر سے کوئی تعلق نہیں، مگر نوازشریف کسی کی سنتے ہیں نہ مانتے ہیں۔