عسکری ونگز رکھنے والی جماعتوں پر پابندی عائد کی جائے: علامہ ریاض شاہ

لاہور ( سپیشل رپورٹر)جماعت اہلسنّت پاکستان کے مرکزی ناظم اعلیٰ علامہ سیّد ریاض حسین شاہ نے کہا ہے کہ پاکستان پراکسی وارز کا میدان بن چکا ہے۔ غیرملکی مداخلت ختم کیے بغیر امن ممکن نہیں۔ غیرملکی ایجنسیوں کے نیٹ ورکس کا صفایا کیا جائے۔ سانحۂ اسلام آباد نے ہمارے داخلی کھوکھلے پن کو آشکار کر دیا ہے۔ بلوچ باغیوں کو امریکہ اور مغرب کی سرپرستی حاصل ہے۔ پاکستان دشمن قوتیں آزاد بلوچستان کے ایجنڈے پر عمل پیرا ہیں۔ اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارشات پارلیمنٹ میں پیش کی جائیں۔ سزائے موت کو معطل کرنے کی وجہ سے جرائم بڑھ رہے ہیں۔ نظامِ مصطفی کے نفاذ کے لیے عملی اقدامات کیے جائیں۔ سودی نظام ختم کر کے معاشی بحران ختم کیا جا سکتا ہے۔ دہشت گردی ختم کیے بغیر اقتصادی استحکام ممکن نہیں۔ مسلح ونگز رکھنے والی جماعتوں پر پابندی لگانی چاہیے۔ ملک کو اسلحہ سے پاک کرنے کی مہم شروع کی جائے۔حکومت عوامی مسائل کے حل پر توجہ دے۔ قوم کو مایوسی اور ملک کو بحران سے نکالنے کے لیے انقلابی اقدامات کی ضرورت ہے۔  پاک افغان بارڈر کو سیل کیا جائے۔ ملک میں خوف کا راج اور دہشت کا غلبہ ہے۔