صوبائی دارالحکومت میں پانی کی قلت بحرانی صورت اختیار کر گئی

 لاہور(خصوصی نامہ نگار) صوبائی دارالحکومت میں پانی کی قلت نے بھی بحرانی صورتحال اختیار کر لی ،اکثر علاقوں میں پانی دستیاب نہ ہونے کے باعث شہری دور دراز علاقوں سے بھر کر لانے پر مجبور ہو گئے ‘ مختلف علاقوں میں مکین پانی کی بوند بوند کو ترس گئے ، شہر لاہور میں بسنے والے نصف سے زائد شہری پانی کی قلت کے باعث پریشان ہیں، مختلف علاقوں کے بعد سبزہ زار، ساندہ، سنت نگر، بسطامی روڈ، سمن آباد، مغل پارک بند روڈ، گلشن راوی، کیپٹن جمال روڈ، رسول پارک ملتان روڈ اور اس سے ملحقہ آبادیوں کے مکین بھی واسا کے غضب کا شکار ہونے لگے، ان علاقوں میں گزشتہ 4 روز سے پانی کی شدید قلت ہے، گزشتہ روز رسول پارک میں بچوں اور خواتین نے برتن اٹھا کر پانی کی عدم دستیابی پر واسا حکام کے خلاف مظاہرہ کیا ، ان کا کہنا تھا کہ بارہا واسا کے متعلقہ دفتر میں شکایات کیںکہ پانی کے مسئلہ کو حل کیا جائے لیکن ایک بار پانی ٹینکر بھیج کر دوبارہ اس جانب رخ نہیں کیا گیا۔ اور اب جب شکایت کرتے ہیں تو ایک ہی جواب ملتا ہے بجلی کی لوڈشیڈنگ ہیں ہم کیا کریں۔ بجلی ٹھیک ہو گی تو پھر پانی بھی سب کو ملنے لگے گا۔ شہریوں نے اعلیٰ حکام سے اپیل کی ہے کہ وہ مسئلہ کا فوری نوٹس لیں۔