یونیورسٹیز ایکٹ میں ترمیم، سینٹ ختم، پرو چانسلر، پرو وائس چانسلر کے عہدے تشکیل


ملتان (نمائندہ نوائے وقت) پنجاب حکومت نے یونیورسٹیز ایکٹ میں ترامیم کا گزٹ نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔ اس ترمیمی ایکٹ میں یونیورسٹیز میں سینٹ کو ختم کر کے پرو چانسلر اور پرو وائس چانسلر کے نئے عہدے تشکیل کئے گئے ہیں جبکہ وائس چانسلرز کے لامحدود اختیارات میں کمی کر کے 16/03 کا خصوصی اختیار استعمال کرنے پر ہائر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ پنجاب کو سات یوم کے اندر لازمی رپورٹ کرنے کا پابند کیا گیا ہے۔ یونیورسٹیز ترمیمی ایکٹ میں وائس چانسلر کا خصوصی اختیار 16/04 جس کے تحت یونیورسٹی میں نئی اسامی پیدا کر کے تعیناتی کی جا سکتی تھی کو بھی ختم کر دیا گیا ہے۔ اب یونیورسٹی میں نئی اسامی کی منظوری صرف سنڈیکیٹ دے سکے گی۔ چانسلر گورنر پنجاب کے اور صوبائی وزیر تعلیم پرو چانسلر ہونگے جبکہ یونیورسٹی کے تین سینئر پروفیسرز میں سے ایک پروفیسرز کو پرو وائس چانسلر تعینات کیا جائے گا۔